209

آئی جی خیبرپختونخوا کا پولیس ٹریننگ کالج ہنگو کا دورہ 

آئی جی خیبرپختونخوا کا پولیس ٹریننگ کالج ہنگو کا دورہ 

خیبر پختونخوا پولیس نے اندھے قتل کے واقعات میں ریکارڈ وقت میں ملزمان کو گرفتار کر کے حقائق قوم کے سامنے رکھے ہیں۔ صوبائی پولیس میں میرٹ اور جزا سزا کا نظام مستحکم ہو چکا ہے۔ پولیس کی استعداد کار بڑھانے کے لیے جدید خطوط پر تربیت اور سہولیات کی فراہمی یقینی بنا رہے ہیں ان خیالات کا اظہار آئی جی پولیس خیبرپختونخوا ڈاکٹر ثنا اللہ عباسی نے پولیس ٹریننگ کالج ہنگو میں میڈیا ٹاک کے دوران کیا. پولیس ٹریننگ کالج آمد پر پولیس کےچاک و چوبند دستے نے آئی جی کو گارڈ آف آنر پیش کیا. اس موقع پر آر پی او کوہاٹ طیب حفیظ چیمہ، کمانڈنٹ پولیس ٹریننگ کالج اول خان، ڈی پی او کوہاٹ، ڈی پی او اورکزئی اور ڈی پی او ہنگو شاہد احمد خان بھی موجود تھے آئی جی ڈاکٹر ثناء اللہ عباسی نے میڈیا ٹاک میں بتایا کہ خیبر پختونخوا پولیس ہر لحاظ سے پروفیشنل فورس ہے اور اس نے بارہا اپنی تربیت میں مہارت اور زیرک پن کا عملی مظاہرہ کیا ہے جس کی ایک مثال صوبے میں اندھے قتل کے واقعات میں ملوث ملزمان کی ریکارڈ وقت میں گرفتاری ہے۔ انہوں نے کہا کہ پولیس ٹرینگ کالج ہنگو اسی سال سے پولیس کی تربیت اور کورسز کے حوالے سے اپنی خدمات پیش کر رہا ہے اور پورے ملک کی پولیس یہاں سے تربیت حاصل کر کے قوم کی خدمت میں پیش پیش ہے اس ادارے کی خدمات اور تاریخی حثیت کے پیش نظر اسے یونیورسٹی بنانے کی کوششیں کی جا رہی ہیں۔ آئی جی ڈاکٹر ثناء اللہ عباسی نے کہا کہ پولیس میں ٹرانسفر اور تعیناتی کے عمل کے لیے جامع پالیسی وضع کی گئی ہے اور کوشش ہے کہ سی پی او کے تمام افسران میرٹ پر تعینات کئے جائیں۔انہوں نے کہا کہ ہنگو پولیس نے مدیحہ قتل کے اصل محرکات نہ صرف تین دن میں قوم کے سامنے رکھے بلکہ اصل ملزم گرفتار کر کے اپنی پیشہ ورانہ مہارت کا عملی ثبوت فراہم کیا جس پر آر پی او طیب حفیظ چیمہ، ڈی پی او ہنگو شاہد احمد خان اور انوسٹی گیشن پولیس مبارک باد کی مستحق ہے۔ آئی جی پولیس نے کہا کہ پولیس لائن ہنگو تکمیل کے ۤاخری مراحل میں ہے اور اسے جلد پولیس کے حوالے کر دیا جائے گا اس کے علاوہ ہنگو کے تھانوں کی تعمیر کا عمل بھی تیز کیا جائے گا۔ ایک سوال کے جواب میں ائی جی ڈاکٹر ثناءاللہ عباسی نے کہا کہ قبائلی اضلاع میں تعینات ڈی پی اووز اچھی ساکھ اور تربیت کے حامل ہیں اور ان کی کارگردگی سے مطمئن ہیں. آئی جی نے اعلی سطحی اجلاس کی صدارت بھی کی جس میں امن و امان اور دیگر امور کا جائزہ لیا گیا. انسپکٹر جنرل پولیس ڈاکٹرثناء اللہ عباسی نے پی ٹی سی میں منعقدہ ورائٹی شو میں بھی شرکت کی جہاں پولیس جوانوں نے علاقائی رقص پیش کیا۔ اس موقعہ پر کمانڈنٹ پولیس ٹریننگ کالج اول خان نے آئی جی پی کو سوئینیر پیش کیا جبکہ آئی جی ڈاکٹر ثناء اللہ عباسی نے پولیس جوانوں سے خطاب بھی کیا اور انہیں پیشہ ورانہ تقاضوں کے مطابق فرائض انجام دینے کی ہدایت کی.

شیئر کریں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں