782

سورج گرہن کا آغاز ہوگیا۔ 1999 کے بعد آج سب سے تگڑا سورج گرہن ہوگا۔

پاکستان میں آج سورج گرہن ہوگا، جو ملک کے بیشتر علاقوں میں دیکھا جا سکے گا، محکمہ موسمیات کا کہنا ہے کہ سورج گرہن سے مغرب کا گمان ہونے لگے گا، طبی ماہرین نے فلٹر والے چشمے کے بغیر سورج گرہن دیکھنے سے منع کیا ہے۔

محکمہ موسمیات کے مطابق سب سے زیادہ سورج گرہن بلوچستان کے ساحلی علاقوں، شمالی سندھ اور جنوبی پنجاب میں دیکھا جا سکے گا۔

ان کا کہنا ہے کہ 1999ء والے گرہن کے بعد یہ سب سے تگڑا سورج گرہن ہوگا، کراچی میں سورج گرہن کا آغاز صبح 9 بج کر 29 منٹ پر ہو گا، 10 بج کر 59 منٹ پر عروج ہوگا اور سورج کا 92 فیصد حصہ چاند کے پیچھے چھپ جائے گا۔

کراچی میں سورج گرہن کا اختتام دوپہر 12:36 منٹ پر ہو گا، لاہور میں سورج گرہن کا آغاز صبح 9:48 منٹ پر ہوگا، 11:26منٹ پر اس کا عروج ہو گا، سورج کا 91 فیصد حصہ چاند کے پیچھے چھپ جائے گا۔

لاہور میں سورج گرہن کا اختتام دوپہر 1:10 منٹ پر ہوگا، اسلام آباد میں سورج گرہن کا عروج دن 11:25منٹ پر ہو گا۔

سورج گرہن کی وجہ سے درجہ حرارت میں واضح کمی آئے گی۔

دوسری جانب طبی ماہرین نے سورج گرہن کے دوران سورج کی طرف بغیر کسی فلٹر والے چشمے کے دیکھنے سے منع کیا ہے اور کہا ہے کہ ذرا سی بے احتیاطی سورج گرہن دیکھنے والے کو عمر بھر کے لیے بصارت سے محروم کر سکتی ہے۔

علماء کرام کہتے ہیں کہ سورج گرہن کے دوران توبہ استغفار اور نماز کسوف ادا کریں۔

شیئر کریں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں