82

سعودی عرب میں ماہ رمضان کا چاند نظر نہیں آیا،خلیجی ممالک میں پیر کو پہلا روزہ

سعودی عرب میں ماہ رمضان کا چاند نظر نہیں آیا،خلیجی ممالک میں پیر کو پہلا روزہ

ریاض، 4 مئی( بیوٹی فل کوہاٹ) سعودی عرب، ﻣﺘﺤﺪﮦ ﻋﺮﺏ ﺍﻣﺎﺭﺍﺕ ﺍﻭﺭ ﺑﯿﺸﺘﺮ ﺧﻠﯿﺠﯽ ﻣﻤﺎﻟﮏ ﻣﯿﮟ ﺁﺝ ﺑﺮﻭﺯ ﮨﻔﺘﮧ ﮐﯽ ﺭﺍﺕ ﮐﻮ ﺭﻣﻀﺎﻥ ﺍﻟﻤﺒﺎﺭﮎ ﮐﺎ ﭼﺎﻧﺪ ﻧﻈﺮ ﻧﮩﯿﮟ ﺁﯾﺎ۔ ﺟﺲ ﮐﮯ ﺳﺒﺐ ﻭﮨﺎﮞ ﭘﮩﻼ ﺭﻭﺯﮦ 6 ﻣﺌﯽ ﺑﺮﻭﺯ ﭘﯿﺮ ﮐﻮ ﮨﻮﮔﺎ، ﭼﺎﻧﺪ ﻧﻈﺮ ﻧﮧ ﺁﻧﮯ ﮐﺎ ﺍﻋﻼﻥ ﺳﺮﮐﺎﺭﯼ ﻃﻮﺭ ﭘﺮ ﺳﻌﻮﺩﯼ ﻋﻠﻤﺎﺀ ﮐﻮﻧﺴﻞ ‏(ﺳﭙﺮﯾﻢ ﮐﻮﺭﭦ ‏) ﻧﮯ ﺍﻋﻼﻣﯿﮧ ﺟﺎﺭﯼ ﮐﺮﮐﮯ ﮐﯿﺎ۔ ﺳﻌﻮﺩﯼ ﻋﺮﺏ ﻣﯿﮟ ﺍٓﺝ ﺍﻡ ﺍﻟﻘﺮﯼٰ ﮐﯿﻠﻨﮉﺭ ﮐﮯ ﻟﺤﺎﻅ ﺳﮯ ﺷﻌﺒﺎﻥ ﮐﯽ 29 ﺗﺎﺭﯾﺦ ﺗﮭﯽ، ﺍﻣﯿﺪ ﮐﯽ ﺟﺎﺭﮨﯽ ﺗﮭﯽ ﮐﮧ ﺍٓﺝ ﭼﺎﻧﺪ ﻧﻈﺮ ﺁﺟﺎﺋﯿﮕﺎ ﺍﻭﺭ ﮐﻞ ﺳﮯ ﭘﮩﻼ ﺭﻭﺯﮦ ﮨﻮﮔﺎ، ﻟﯿﮑﻦ ﺍٓﺝ ﭼﺎﻧﺪ ﻧﻈﺮ ﻧﮧ ﺍٓﻧﮯ ﮐﯽ ﻭﺟﮧ ﺳﮯ ﻋﺮﺏ ﻭ ﺧﻠﯿﺠﯽ ﻣﻤﺎﻟﮏ ﻣﯿﮟ ﭘﮩﻼ ﺭﻭﺯﮦ 6 ﻣﺌﯽ ﺑﺮﻭﺯ ﭘﯿﺮ ﮐﻮ ﺭﮐﮭﺎ ﺟﺎﺋﮯ ﮔﺎ۔ ﺳﻌﻮﺩﯼ ﻣﯿﮉﯾﺎ ﮐﯽ ﺭﭘﻮﭨﺲ ﮐﮯ ﻣﻄﺎﺑﻖ ﺭﻭٔﯾﺖ ﮨﻼﻝ ﮐﮯ ﻣﺎﮨﺮﯾﻦ ﻓﻠﮑﯿﺎﺕ ﮐﺎ ﺳﺐ ﺳﮯ ﺑﮍﺍ ﺍﺟﻼﺱ متعدد شہروں مثلا ﺳﺪﻳﺮ، تمیر، الفضیل، ﺍﻟﻘﺼﻴﻢ، وغیره ﻣﯿﮟ ﻣﻨﻌﻘﺪ ﮐﯿﺎ ﮔﯿﺎ، ﺟﺲ ﻣﯿﮟ ﺍﻧﺘﮩﺎﺋﯽ ﺣﺴﺎﺱ ﭨﯿﻠﯽ ﺍﺳﮑﻮﭖ ﻭ ﺩﯾﮕﺮ ﺍٓﻻﺕ ﮐﯽ ﻣﺪﺩ ﺳﮯ سرکاری علماء و مفتیان کرام اور ماہر فلکیات کے ذریعہ ﭼﺎﻧﺪ ﺩﯾﮑﮭﻨﮯ ﮐﯽ ﮐﻮﺷﺶ ﮐﯽ ﮔﺌﯽ، ﺷﮩﺎﺩﺗﻮﮞ ﮐﮯ ﻓﯿﺼﻠﮯ ﮐﮯ ﺑﻌﺪ ﺍﺟﻼﺱ ﻧﮯ ﭼﺎﻧﺪ ﻧﻈﺮ ﻧﮧ ﺍٓﻧﮯ ﮐﺎ ﺍﻋﻼﻥ ﮐﺮﺩﯾﺎ. سدیر شہر میں فضاء ابر آلود تهی جبکہ دیگر مقامات پر مطلع صاف تها، ان مذکورہ جگہوں کے علاوه سعودی عرب کے دس مقامات پر بهی چاند دیکهنے کا مقامی کمیٹیوں کے ذریعہ اہتمام کیا گیا، لیکن کسی مقامات سے بهی رویت کی خبر موصول نهیں ہوئی، ﺟﺲ ﮐﮯ ﺗﺤﺖ ﺳﻌﻮﺩﯼ ﻋﺮﺏ ﻣﯿﮟ ﯾﮑﻢ ﺭﻣﻀﺎﻥ ﺍﻟﻤﺒﺎﺭﮎ 6 ﻣﺌﯽ ﺑﺮﻭﺯ ﭘﯿﺮ ﮐﻮ ﮨﻮﮔﺎ. ﺧﯿﺎﻝ ﺭﮨﮯ ﮐﮧ اس بار ﺳﻌﻮﺩﯼ ﺳﭙﺮﯾﻢ ﮐﻮﺭﭦ ﻧﮯ ﺭﻣﻀﺎﻥ ﺍﻟﻤﺒﺎﺭﮎ کے ﭼﺎﻧﺪ ﺩﯾﮑﮭﻨﮯ ﮐﯽ منفرد ﺍﭘﯿﻞ ﮐﺮﺗﮯ ﮨﻮﺋﮯ ﮐﮩﺎ ﺗﮭﺎ ﮐﮧ ﻋﻮﺍﻡ ﺍﻟﻨﺎﺱ ہفتے کی شام ﮐﮭﻠﯽ ﺁﻧﮑﮫ ﯾﺎ ﺧﺼﻮﺻﯽ ﺁﻻﺕ ﺳﮯ ﭼﺎﻧﺪ دیکهنے کا اہتمام کریں ﺍﻭﺭ چاند ﻧﻈﺮ ﻧﮧ ﺁﻧﮯ ﭘﺮ ﺍﺗﻮﺍﺭ ﮐﻮ ﺑﮭﯽ ﭼﺎﻧﺪ ﺩﯾﮑﮭﻨﮯ ﮐﺎ ﺍﮨﺘﻤﺎﻡ ﮐﯿﺎ ﺟﺎﺋﮯ۔ ﺳﭙﺮﯾﻢ ﮐﻮﺭﭦ ﻧﮯ ﺗﻮﺟﮧ ﺩﻻﺋﯽ تھی ﮐﮧ ﮨﻔﺘﮯ ﮐﻮ ﺍﻡ ﺍﻟﻘﺮﯼٰ ﮐﯿﻠﻨﮉﺭ ﮐﮯ ﻟﺤﺎﻅ ﺳﮯ ﺷﻌﺒﺎﻥ ﮐﯽ 29 ﺗﺎﺭﯾﺦ ﮨﮯ ﺍﮔﺮ ﮐﺴﯽ ﮐﻮ ﻣﻤﻠﮑﺖ ﮐﮯ ﮐﺴﯽ ﺑﮭﯽ ﺷﮩﺮ، ﻗﺼﺒﮯ ﯾﺎ ﺑﺴﺘﯽ ﻣﯿﮟ ﮨﻔﺘﮯ ﮐﻮ ﭼﺎﻧﺪ ﻧﻈﺮ ﺁﺟﺎﺋﮯ ﺗﻮ ﻭﮦ ﻗﺮﯾﺐ ﺗﺮﯾﻦ ﻋﺪﺍﻟﺖ ﭘﮩﻨﭻ ﮐﺮ ﺍﭘﻨﯽ ﺷﮩﺎﺩﺕ ﻗﻠﻤﺒﻨﺪ ﮐﺮﺍﺩﮮ۔ ﮨﻔﺘﮯ ﮐﻮ ﭼﺎﻧﺪ ﻧﻈﺮ ﻧﮧ ﺁﻧﮯ ﮐﯽ ﺻﻮﺭﺕ ﻣﯿﮟ ﺍﺗﻮﺍﺭﮐﻮ ﭼﺎﻧﺪ ﺩﯾﮑﮭﻨﮯ ﮐﯽ ﮐﻮﺷﺶ ﮐﯽ ﺟﺎﺋﮯ، حالانکہ اسلامی 30 تاریخ کو چاند واضح نظر آتا ہے- ﯾﮩﯽ ﻭﺟﮧ ﮨﮯ ﮐﮧ ﺳﻌﻮﺩﯼ ﻋﺮﺏ ﻣﯿﮟ ﺳﭙﺮﯾﻢ ﮐﻮﺭﭦ ﮐﯽ ﺩﻭ ﺩﻥ ﺗﮏ ﺭﻣﻀﺎﻥ ﮐﺎ ﭼﺎﻧﺪ ﺩﯾﮑﮭﻨﮯ ﮐﯽ ﺍﭘﯿﻞ ﻧﮯ ملک بهر میں ﮨﻠﭽﻞ ﻣﭽﺎ رکهی ﮨﮯ۔ ﺗﺎﮨﻢ سپریم کورٹ کی کسی بھی ﻧﺠﯽ ﮐﻤﯿﭩﯿﻮﮞ ﮐﻮ آج ﻣﻠﮏ ﮐﮯ ﮐﺴﯽ ﺑﻬﯽ ﺣﺼﮯ ﺳﮯ ﭼﺎﻧﺪ ﻧﻈﺮ ﺍٓﻧﮯ ﮐﯽ ﮐﻮﺋﯽ ﺷﮩﺎﺩﺕ ﻣﻮﺻﻮﻝ ﻧﮩﯿﮟ ﮨﻮﺋﯽ، ﺟﺲ ﮐﯽ ﺑﻨﺎﺀ ﭘﺮ ﺍﺏ کل دوباره چاند دیکها جائے گا، اور کل سرکاری طور پر ﺭﻣﻀﺎﻥ کے مہینہ کے ﺷﺮﻭﻉ ہونے کا باضابطہ اعلان کیا جائے ﮔﺎ۔یاد ﺭﮨﮯ ﮐﮧ ﺳﻌﻮﺩﯼ ﻋﺮﺏ ﮐﮯ ﻓﻠﮑﯿﺎﺗﯽ ﺍﺩﺍﺭﮮ ﻧﮯ ﮔﺰﺷﺘﮧ ﺭﻭﺯ ہی پیشگوئی کردی تھی ﮐﮧ ہفتے ﮐﮯ ﺭﻭﺯ ﭼﺎﻧﺪ ﺩﯾﮑﮭﻨﺎ ﻣﻤﮑﻦ ﻧﮩﯿﮟ ﮨﻮﮔﺎ اور ﭘﮩﻼ روزه بروز پیر 6 مئی ﮐﻮ ممکن ﮨﻮﮔﺎ۔ ﺳﻌﻮﺩﯼ ﻋﺮﺏ ﮐﮯ ﻋﻼﻭﮦ ﺧﻠﯿﺠﯽ ﻣﻤﺎﻟﮏ ﻣﯿﮟ ﺑﮭﯽ ﮐﮩﯿﮟ ﭼﺎﻧﺪ ﻧﻈﺮ ﻧﮩﯿﮟ ﺁﯾﺎ ﺟﺲ ﮐﮯ ﺳﺒﺐ ﻭﮨﺎﮞ ﺑﮭﯽ ﭘﮩﻼﺭﻭﺯﮦ ﭘﯿﺮ ﮐﻮ ﮨﻮﮔﺎ۔

شیئر کریں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں