44

پولیوکے موذی مرض کے خاتمے کیلئے پولیو ورکرز کی قربانیاں ناقابل فراموش ہیں۔ڈپٹی کمشنر کوہاٹ

پولیوکے موذی مرض کے خاتمے کیلئے پولیو ورکرز کی قربانیاں ناقابل فراموش ہیں۔ ڈپٹی کمشنر کوہاٹ

ڈپٹی کمشنر کوہاٹ مطیع اللہ خان نے کہا ہے کہ پولیو کے موذی مرض کے خاتمے کیلئے پولیو ورکرز کی قربانیاں ناقابل فراموش ہیں اور حکومت ان کی قربانیوں کو قدر کی نگاہ سے دیکھتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ بدقسمتی سے پاکستان ان ممالک میں شامل ہے جہاں آج بھی پولیو کا وائرس موجود ہے. اس لئے پوری دنیا الرٹ ہے اور اس کی نظریں پاکستان پرہیں لہٰذا یہ ہم سب کی قومی ذمہ داری ہے کہ پولیو کے خاتمے کیلئے اپنا بھر پور کردار ادا کر کے ملک کو پولیو فری بنائیں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے جمعہ کے روز ڈسٹرکٹ کونسل ہال کوہاٹ میں اچھی کارکردگی کے حامل فرنٹ لائن پولیو ورکرز کیلئے منعقدہ تقریب تقسیم انعامات سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ تقریب سے ڈسٹرکٹ ناظم کوہاٹ محمد نسیم آفریدی اور ڈی ایچ او کوہاٹ نے بھی خطاب کیا۔ ڈپٹی کمشنر نے کہا کہ ہم سب پولیو کی حساسیت سے پوری طرح آگاہ ہیں. اس لئے ہم کسی طرح بھی اس صورتحال پر آنکھیں بند نہیں کر سکتے۔ انہوں نے کہا کہ اچھے ورکرز کی آئندہ بھی اسی طرح اعتراف اور حوصلہ افزائی کریں گے جبکہ بری کارکردگی پر سخت ایکشن ہوگا۔مطیع اللہ خان نے کہا کہ گزشتہ روز پولیو اجلاس میں وزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا نے ضلعی انتظامیہ کو باقاعدہ ہدایات جاری کی ہیں اور واضح کیا ہے کہ پولیو کے سلسلے میں کسی قسم کی کوتاہی برداشت نہیں کی جائے گی۔ قبل ازیں ڈپٹی کمشنرنے ضلع ناظم کے ہمراہ فرنٹ لائن پولیو ورکرز میں تعریفی اسناد تقسیم کئے۔

شیئر کریں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں